28 سال بعد پیدا ہونے والا بچہ چاند رات کو ہوائی فائرنگ سے اپنی زندگی کی بازی ہار گیا

اولاد ماں باپ کے لئے سب سے بڑی نعمت ہوتی ہے اور ماں باپ اولاد کی دنیا کا سب سے بڑا پیار لیکن جب ماں باپ اولاد کا دکھ دیکھتے ہیں تو ان کے لیے دنیا کا سب سے بڑا دکھ ہوتا ہے لیکن اولاد اللہ تعالی کی طرف سے آزمائش ہوتی ہے لیکن بعض اوقات کچھ غلطیاں لوگوں کی ہم سے ہماری سب سے قیمتی چیز چھین لیتی ہیں پاکستان کے مختلف شہروں میں شادی بیاہ، عید کے تہوار اور کسی بھی خوشی کے موقع پر ہوائی فائرنگ کا کھیل کھیلا جاتا ہے جس کی زد میں آکر عام شہری جان سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں۔

حال ہی میں پشاور میں افسوسناک واقعہ پیش آیا جب چاند رات کے موقع پر ہوائی فائرنگ کی گئی تو گولی چھ سالہ معصوم بچے کے سر پر لگی اور اس کی جان چلی۔ بچے کے والدین، بہنیں اور رشتہ دار شدید غم سے دو چار ہیں کہ عید آنے سے قبل ہی ان کے گھر صفِ ماتم بچھ گئی۔

6 سال کا شہود گھر کے باہر گولی لگنے سے زخمی ہوا تھا جس کے بعد اسے پشاور کے حیات آباد میڈیکل کمپلیکس میں داخل کیا گیا جہاں 30 گھنٹے وینٹی لیٹر پر رہنے کے بعد بچہ دم توڑ گیا۔

شہود کی بہن نے سماء نیوز سے گفتگو میں کہا کہ میرا بھائی افطار کے بعد گھر سے باہر نکلا، اس کے ساتھ اور بھی بچے کھیل رہے تھے، تو کہیں سے ہوائی فائرنگ ہوئی اور گولی اس کے سر پر آکر لگی اور وہ گر گیا۔ شہود کی بہن کا کہنا تھا کہ چھوٹی سی خوشی کے لیے ہوائی فائرنگ کر کے دوسرے کی زندگی برباد کر دیتے ہیں۔

6 سالہ بچے کے اہلخانہ میں سے ایک فرد کا کہنا تھا کہ 28 سال بعد ماموں کے ہاں بیٹا ہوا تین بہنوں کے بعد، ہم کس پر ایف آئی آر کریں، ہم کس کے پیچھے جائیں، ملزمان پکڑے بھی جائیں تو بچہ تو واپس نہیں آئے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.