چار چیزیں عقل اور رزق بڑھاتی ہیں

این این ایس نیوز! یہ تمہارا جو نفس ہے۔ تم اگر اسے خیر میں مصروف نہیں کرلیتے ۔ تو یہ تمہیں شرمیں مصروف کر لے گا۔ حضر ت امام شافعی ؒ سے پوچھا گیا۔ آپ نے اللہ کو کیسے پہچانا؟ جو اب ملا : شہتوت کے پتوں سے ، جسے بکری کھاتی ہے۔ تو مینگنی بنتی ہے۔ ہرن کھاتا ہے تو مشک بنتا ہے۔ اور ریشم کا کیڑا کھاتا ہے تو ریشم بنتا ہے۔ کوئی تو ہے جو ایک ہی شے سے مختلف چیزیں بنا تا ہے۔ اور وہ اللہ کے سوا کوئی نہیں۔ لوگوں کی باتیں پتھروں کی طرح ہوتی ہیں۔

ان کو پیٹھ پر لاد لو گے تو یہ پیٹھ ٹو ٹ جائے گی ان کو اپنے قدموں تلے ایک برج بنا لو تو ان پر چڑھ کے بلند ہوتے جاؤ۔ دل زبان کی کھیتی ہے۔ ا س میں اچھی تخم ریزی کرو اگر سارے دانے نہ اگ سکیں تو پک کر ضرور اگ جائیں گے ۔ اللہ تعالیٰ کے راستہ پر خوس قسمتی سے چل پڑے ہوتو تیز بھاگو۔ تیز بھا گنا کسی وجہ سے مشکل ہے تو آہستہ بھاگ لو۔ تھک گئے ہوتو چل لو یہ بھی نہیں کرسکتے توکھسک لو مگر واپسی کا کبھی بھی نہ سوچنا۔ اگر چاہتے ہو کہ اللہ تعالیٰ تمہارا دل روشن فرما دے

تو غیر ضروری گفتگو سے بچو گن اہوں سے دور رہو اور کوئی نہ کوئی ایسا عمل خیر ضرور کیا کرو جس کا علم خدا کے علاوہ کسی کو نہ ہو۔ جس پر دنیا کی محبت غالب ہوتی ہے۔ وہ اہل دنیا کا غلا م بن جاتا ہے۔ علم کا مزا سے آتا ہے۔ جس نے تنگ دستی کے باوجود علم حاصل کیا ہو۔ جو غ صہ کے بات پر غ صہ نہ کرے وہ گدھا ہے اور جو منانے پر نہ مانے وہ ش یطان ہے۔ میں نے کسی شخص کی عزت اگر اس کی حیثیت سے زیادہ کی تو اتنی ہی میری عزت اس کی نظر میں کم ہوگی۔

جس طرح بصارت کی ایک حد ہوتی ہے۔ اسی طرح عقل کی بھی ایک حد ہوتی ہے۔ جہاں وہ ٹھہر جاتی ہے۔ جاہل کو اس بات کا یقین ہوتاہے۔ کہ وہ عالم ہے اس لیے وہ کسی کی بات نہیں سنتا۔ چار چیزیں بدن میں قوت پیدا کرتی ہیں۔ گ وشت کھانا، خوشبو سونگھنا، کثرت سے غسل کرنا، سوتی کپڑا پہننا۔ چار چیزیں نظر کو تیز کرتی ہیں۔ خانہ کعبہ کےسامنے بیٹھنا، سوتے وقت سرمہ لگانا، سبزہ زار کیطرف دیکھنا، صاف جگہ بیٹھنا۔

چار چیزیں عقل کو بڑھاتی ہیں۔ فضول کلام سے پرہیز ، دانت صاف کرنا، صالحین کی مجلس میں بیٹھنا، علماء کرام کی صحبت اختیارکرنا۔ چار چیزیں رزق کو بڑھاتی ہے۔ تہجد کی نماز پڑھنا، کثرت سے استغفار کرنا، کثرت سے صدقہ کرنا، کثرت سے ذکر کرنا۔ مخلوق میں سب سے زیادہ ہمدردی کے قابل وہ ہے ۔ جو تنگ حالی کے باوجود ہمت سے زندگی بسر کرتا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.