سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 10 کے بجائے 25 فیصد اضافے کا اعلان

این این ایس نیوز! وفاقی حکومت کی جانب سے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں صرف 10 فیصد کا اضافہ مذاق ہے، تنخواہوں میں اتنا ہی اضافہ کریں جتنا مہنگائی میں اضافہ کیا، سندھ میں کم سے کم اجرت 25 ہزار روپے جبکہ صوبائی ملازمین کی تنخواہوں میں 25 فیصد اضافہ کریں گے: بلاول بھٹو زرداری

 سندھ کے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 10 کی بجائے 25 فیصد اضافے کا اعلان۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کے چئیرمین بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے کہا گیا ہے کہ وفاقی حکومت کی جانب سے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں صرف 10 فیصد کا اضافہ مذاق ہے، تنخواہوں میں اتنا ہی اضافہ کریں جتنا مہنگائی میں اضافہ کیا، سندھ میں کم سے کم اجرت 25 ہزار روپے جبکہ صوبائی ملازمین کی تنخواہوں میں 25 فیصد اضافہ کریں گے۔بلاول بھٹو زرداری نے وفاقی بجٹ 22-2021ء کو عوام پر معاشی حملہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس وقت ملک میں مہنگائی، بے روزگاری اور غربت تاریخی ہے، بجٹ کیسے عوامی ہو سکتا ہی ۔ایک بیان میں پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اس وقت ملک میں مہنگائی، بے روزگاری اور غربت تاریخی ہے، بجٹ کیسے عوامی ہو سکتا ہی انہوں نے کہا کہ جب پی ٹی آئی بجٹ پیش کر رہی تھی تو سرکاری ملازمین مہنگائی کی دٴہائیاں دے رہے تھے، سال بدل گیا مگر عوام کے حالات نہ بدلے۔چیئرمین پیپلز پارٹی نے کہا کہ بجٹ آ گیا مگر غریب کے گھر کا چولہا آج تک بجھا ہوا ہے، عوام جان چکے ہیں کہ بڑی بڑی باتیں کرنا عمران خان کی عادت ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیرِ اعظم عمران خان عام آدمی کو ریلیف فراہم کرنے میں مکمل ناکام ہو چکے ہیں، بجٹ پیش کر کے انہوں نے اپنا غریب اور عوام دشمن ایجنڈا واضح کر دیا۔پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا یہ بھی کہنا ہے کہ پیپلز پارٹی عمران خان کو عوام کے معاشی قتلِ عام کی اجازت نہیں دے گی۔

یہاں واضح رہے کہ وفاقی حکومت کی جانب سے گزشتہ روز اعلان کردہ وفاقی بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور پنشن میں 10 فیصد اضافے کا اعلان کیا گیا۔ حکومت کے اعلان کو سرکاری ملازمین کی جانب سے بھی مسترد کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ حکومت تنخواہوں اور پنشن میں مزید اضافہ کرے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.